حاج سید عادل علوی کی اسلامی معلومات کامرکزسایٹ کے جدید ترین مطالبhttp://www.alawy.net/11 ذیقعد (1441ھ)ولادت باسعادت حضرت امام رضا علیہ ا لسلام کے موقع پرامام رضا علیہ السلام کی ولادت ایک قول کی بناپر بروزجمعرات 11/ربیع الاول سنہ153 هجری کو مدینہ منوره میں هوئی ۔ ثقۃ الاسلام شیخ کلینی نے آپ ؑ کی ولادت باسعادت کو سنہ 148 هجری میں ذکر کیا هے ۔ امام رضا علیہ السلام حضرت امام موسی کاظم علیہ السلام کی اولاد میں سب سے عظیم، دانشمند، شریف، مقدس اور زاهد تھے جنہوں نے اس تاریخ میں اپنے بابرکت وجود سے مدینہ کو منوّر کیا اور خوشی و مسرّت سے سرشار کردیا ۔ http://www.alawy.net/urdu/news/16686/یکم ذیقعد(1441ھ)ولادت باسعادت حضرت معصومہ سلام اللہ عليہاکے موقع پرکریمۂ اہل بیت حضرت معصومہ (س) فرزندِ رسول حضرت امام موسی کاظم (ع) کی دختر گرامی اور حضرت امام رضا (ع) کی ہمشیرہ ہیں۔ آپ کا اصلی نام فاطمہ ہے۔ آپ اور امام رضا ایک ہی ماں سے پیدا ہوئے ہيں، آپ کے مشہور نام خیزران، ام البنین اور نجمہ ہیں ۔ روایات کے مطابق حضرت فاطمۂ معصومہ یکم ذی العقدہ 173ھ ق کو مدینۂ منوّرہ میں پیدا ہوئيں حضرت فاطمۂ معصومہ (س) اہل بیت رسول کی اُن ہستیوں میں سے ہیں جو مقام عصمت کی حامل نہ ہوتے ہوئے بھی عظیم شخصیت کی مالک تھیں۔ http://www.alawy.net/urdu/news/16672/25شوال(1441ھ)شہادت حضرت امام جعفرصادق علیہ السلام کے موقع پرحضرت امام جعفر صادق علیہ السلام 65 سال کی عمر میں منصور دوانقی کی طرف سے مسموم ہوئے جس سے آنحضرت کی شہادت واقع ہوئی ۔ آپ کی شہادت کی تاریخ کے بارے میں دو قول نقل ہوئے ہیں ۔ بعض نے 15 رجب سن 148 ھ اور بعض نے 25 شوال سن 148 بیان کیا ہے اور مشہور شیعہ مؤرخوں اور سیرہ نویسوں کے نزدیک دوسرا قول یعنی 25 شوال ہی معتبر ہے ۔ آپ کی شہادت کے بعد حضرت امام موسی کاظم ؑنے بھائیوں اور افراد خاندان کے ہمراہ آنحضرت کے غسل و کفن کے بعد بقیع میں دفن کیا ۔ http://www.alawy.net/urdu/news/16658/15رمضان(1441ھ)ولادت حضرت امام حسن مجتبیٰ علیہ السلام کے موقع پر آپ ۱۵/ رمضان ۳ ہجری کی شب کو مدینہ منورہ میں پیداہوئے ۔ مورخین کا کہنا ہے کہ رسول کے گھر میں آپ کی پیدائش اپنی نوعیت کی پہلی خوشی تھی۔ آپ کی ولادت نے رسول کے دامن سے مقطوع النسل ہونے کا دھبہ صاف کردیا اور دنیا کے سامنے سورہ کوثرکی ایک عملی اور بنیادی تفسیر پیش کردی۔http://www.alawy.net/urdu/news/16597/15شعبان المعظم(1441ھ)ولادت امام مہدی(عجل اللہ فرجہ)کےموقع پربارہویں امام معصوم حضرت حجت بن الحسن المہد ی ، امام زمانہ (عجل اللہ تعالی فرجہ) نیمہ شعبان، ٢٥٥ ہجری ، شہر سامراء میں متولد ہوئےآپ کے والد کا نام امام حسن عسکری علیہ السلام اور والدہ کا نام نرجس ہے امام مہدی (عج) کے لئے بہت سے اسماء، القاب اور کنیات منقول ہیں ان میں سب سے زیادہ مشہور لقب "مہدی"ہے ۔http://www.alawy.net/urdu/news/16528/25رجب (1441ھ) شہادت حضرت امام کاظم علیہ السلام کے موقع پرسب سے آخر میں امام موسیٰ کاظم علیہ السّلام سندی بن شاہک کے قید خانے میں رکھے گئے یہ شخص بہت ہی بے رحم اور سخت دل تھا- آخر اسی قید میں حضرت کوانگور میں زہر دیا گیا- 25رجب 183ھ میں 55 سال کی عمر میں حضرت کی شہادت ہوئی۔ شہادت کےبعد آپ کے جسد مبارک کے ساتھ بھی کوئی اعزاز کی صورت اختیار نہیں کی گئی بلکہ حیرتناک طریقے پر توہین آمیز الفاظ کے ساتھ اعلان کرتے ہوئے آپ کی لاش کو قبرستان کی طرف روانہ کیا گیا- مگر اب ذرا عوام میں احساس پیدا ہو گیا تھا اس لئے کچھ اشخاص نے امام کے جنازے کو لے لیا اور پھر عزت و احترام کے ساتھ مشایعت کر کے بغداد سے باہر اس مقام پر جواب کاظمین کے نام سے مشہور ہے، دفن کیا۔http://www.alawy.net/urdu/news/16506/15رجب (1441ھ)وفات حضرت زینب کبریٰ سلام اللہ علیہا کےموقع پرتاریخی شواہد کے مطابق حضرت زینب کبریٰ سلام اللہ علیہا ۱۵ رجب سن ۶۳ ہجری کو دنیا سے رخصت ہوئی ہیں۔ اور آپ کے مدفن کے بارے میں احتمال قوی کے مطابق آپ کی قبر شام میں واقع ہے۔http://www.alawy.net/urdu/news/16499/13رجب (1441ھ) ولادت حضرت امیرالمومنین علیہ السلام کےموقع پرحضرت على علیہ السلام 13 رجب بروز جمعہ ' عام الفيل كے تيسويں سال ميں ( بعثت سے دس سال قبل) خانہ كعبہ ميں پیدا ہوئے۔ خانہ کعبہ ایک قدیم ترین عبادت گاہ ہے اس کی بنیاد حضرت آدم علیہ السلام نے ڈالی تھی اور اس کی دیواریں حضرت ابراہیم علیہ السلام اور حضرت اسماعیل علیہ السلام نے بلند کیں۔ اگر چہ یہ گھر بالکل سادہ ہے نقش و نگار اور زینت و آرائش سے خالی ہے فقط چونے مٹی اور پتھروں کی ایک سیدھی سادی عمارت ہے ، مگر اس کا ایک ایک پتھر برکت و سعادت کا سرچشمہ اور عزت و حرمت کا مرکز و محور ہے ۔ یہ وہی محترم و پاک و پاکیزہ اور با عظمت گھر ہے جس میں مولائے متقیان حضرت علی بن ابی طالب علیہ السلام پیدا ہوئے۔یہ منزلت و شرف فقط حضرت علی علیہ السلام کو حاصل ہے” ۔" لم یولد قبلہ و لا بعدہ مولود فی بیت الحرام"نہ کوئی حضرت علی علیہ السلام سے پہلےپیدا ہوا اور نہ آپ ؑ کے بعد کوئی خانہ کعبہ میں پیدا ہوگا۔ http://www.alawy.net/urdu/news/16496/10 رجب (1441ھ) ولادت حضرت امام محمدتقی علیہ السلام کے موقع پر شمع ہدایت کے نویں چراغ جواد الائمہ حضرت امام محمد تقی علیہ السّلام کی 10 رجب سنہ 195 ھ ق کومدینے میں ولادت باسعادت ہوئی امام علیہ السّلام کو بہت کم ہی اطمینان اور سکون کے لمحات میں باپ کی محبت , شفقت اور تربیت کے سائے میں زندگی گزارنے کاموقع مل سکا ۔آپ جب پانچ سال کے تھےتو اس وقت حضرت امام رضا علیہ السّلام مدینہ سے خراسان کی طرف سفر کرنے پر مجبور ہوئے پھر دوبارہ والد گرامی سے ملاقات کا موقع میسر نہ ہوا ۔ http://www.alawy.net/urdu/news/16494/یکم رجب (1441ھ) ولادت حضرت امام محمدباقرعلیہ السلام کےموقع پرشمع ہدایت کے پانچویں چراغ ، حضرت امام محمد باقر علیہ السلام یکم رجب المرجب ۵۷ ھ یوم جمعہ مدینہ منورہ میں پیدا ہوئے۔ آپ کا اسم گرامی ”لوح محفوظ“کےمطابق اورسرورکائنات کی تعیین کے موافق ”محمد“تھا۔ آپ کی کنیت ”ابوجعفر“ تھی، اورآپ کے القاب کثیرتھے، جن میں باقر،شاکر،ہادی زیادہ مشہورہیں۔ آپ ؑ کی والدہ دوسرے امام حضرت حسن بن علی علیہ السلام کی بیٹی تھیں اور والد علی بن حسین بن علی علیہم السلام تھے ،اس اعتبار سے آپ ؑ پہلے شخص ہیں جو ماں اور باپ کی طرف سے علوی ؑ فاطمی ؑ ہیں۔http://www.alawy.net/urdu/news/16493/